Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / صعنت و تجارت / ایل پی جی کی قیمت میں 8 روپے فی کلو کمی کا امکان

ایل پی جی کی قیمت میں 8 روپے فی کلو کمی کا امکان

کراچی: مائع پٹرولیم گیس کی فروری2018 کے لیے سعودی کنٹریکٹ پرائس میں 65 سے70 ڈالر کی متوقع کمی کے پیش نظر مقامی مارکیٹ میں بھی فی ٹن ایل پی جی کی قیمت میں اوسطا7200 تا7400 روپے کی کمی کے امکانات پیدا ہوگئے ہیں۔
ایل پی جی سیکٹر کے باخبر ذرائع نے ’’ایکسپریس‘‘ کو بتایا کہ فروری 2018 میں فی کلوگرام ایل پی جی کی قیمت میں یکدم8 روپے کی کمی واقع ہوجائے گی کیونکہ ایل پی جی کی سعودی آرامکوکنٹریکٹ پرائس 575 ڈالر سے گھٹ کر510 ڈالر کی سطح پر آجائے گی۔
یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ پاکستان میں مائع پٹرولیم گیس کی سستے متبادل ایندھن کا تصور ختم ہوگیا ہے کیونکہ ایل پی جی کی مقامی قیمت پٹرول ودیگر مہنگی پٹرولیم مصنوعات کی نسبت20 تا25 فیصد زائد ہوچکی ہیں۔
حقیقت یہ ہے کہ پاکستان میں ایل پی جی کم آمدنی کا حامل وہ طبقہ استعمال کرتا ہے جو سوئی سدرن یا سوئی نادرن گیس کمپنی کے گیس کنکشن سے محروم ہے لیکن اس کے باوجود حکومت کی جانب سے فی ٹن ایل پی جی پرغیرمنصفانہ طور پر4669 روپے پٹرولیم ڈیولپمنٹ لیوی عائد کی گئی ہے۔
آل پاکستان ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز ایسوسی ایشن کے سنیئروائس چیئرمین علی حیدر نے ’’ایکسپریس‘‘ کو بتایا کہ ملک میں ایل پی جی کی پالیسی پر عمل درآمد کا فقدان ہے جس کی وجہ سے غیرمعیاری اورکم حرارتی استعداد کی حامل ایل پی جی کی بے دریغ درآمدات ہورہی ہیں حالانکہ سال2015 کی ایل پی جی پالیسی میں یہ طے کیا گیا تھا کہ اگر ایل پی جی پر پٹرولیم ڈیولپمنٹ لیوی عائد کی جائے گی تو صرف سرکاری کمپنیاں ہی ایل پی جی کی مقامی ضروریات کا تعین کرکے اتنی ہی مقدار میں مطلوبہ معیارکی ایل پی جی درآمد کریں گی لیکن اس کے برعکس ملک میں دھڑادھڑ ایل پی جی کی درآمد کی گئی جس کا کوئی پی ایس آئی اسٹینڈرڈ بھی مینٹین نہیں کیا گیا ہے یہی وجہ ہے کہ پاکستان کے غریب صارفین مطلوبہ قیمتوں سے زائد ادائیگیاں کرنے کے باوجود کم حرارتی استعداد کی حامل غیرمعیاری ایل پی جی خریدنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔
علی حیدر نے بتایا کہ وفاقی حکومت کو اپنی متعارف کردہ پالیسیوں پر 100 فیصد عمل درآمد کو یقینی بنانے کے ساتھ ایل پی جی پر پٹرولیم ڈیولپمنٹ لیوی کی وصولیاں بندکرنے کی ضرورت ہے تاکہ گیس کنکشنز سے محروم غریب صارفین کو ریلیف مل سکے۔
انہوں نے مقامی پروڈیوسرز سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ ماہ فروری کے لیے ایل پی جی کی سعودی آرامکوکنٹریکٹ پرائس میں مجوزہ کمی کے تناسب سے قیمتوں میں کریں تاکہ ملک میں ایل پی جی کی قیمتیں حقیقی معنوں میں سستے متبادل ایندھن کے طورپر سامنے آسکیں۔
علی حیدر نے بتایا کہ دنیا بھر میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم ہورہی ہیں جبکہ پاکستان کے مختلف حصوں میں فی کلوگرام ایل پی جی110 روپے،115 روپے اور120 روپے میں فروخت ہورہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ ایل این جی کی آمدکے بعد حالات بہتر ہونے کے تناظر میں وفاقی حکومت ایل پی جی کی درآمدات کو اپنے کنٹرول میں رکھے اور پی ڈی ایل جیسے ظالمانہ ٹیکس کو واپس لینے کا اعلان کرے۔

About Admin

Check Also

Oil

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 10 روپے فی لیٹر اضافے کا امکان

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) یکم اکتوبر سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 10 روپے فی لیٹر …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: