Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / دلچسپ و عجیب / ٹی بیگ پر مصوری کے شاہکار فن پارے

ٹی بیگ پر مصوری کے شاہکار فن پارے

نیویارک: استعمال شدہ ٹی بیگز ہمارے نزدیک کچرے کے ایک بے کار ٹکڑے کی طرح ہوتے ہیں لیکن امریکی گرافک ڈیزائنر اور بصری آرٹ کی ماہر روبی سلویئس بڑی مہارت سے استعمال شدہ ٹی بیگز پر خوبصورت اور مختصر (منی ایچر) پینٹنگز بناتی ہیں۔اب سے تین سال قبل روبی کے پاس فارغ وقت تھا اور ان کے دو ہی کام تھے۔ ایک چائے پینا اور دوم پینٹنگ بنانا۔ یکایک انہیں خیال آیا کہ کیوں نہ استعمال شدہ ٹی بیگ کو بطور کینواس استعمال کیا جائے۔ اس کے بعد انہوں نے ٹی بیگ کو خشک کیا اور اس پر پینٹنگ بنانا شروع کردی۔نتیجہ اچھا برآمد ہونے پر روبی نے ایک پروجیکٹ کا آغاز کیا جس کا نام ’چائے کے 363 دن‘ رکھا گیا اور متواتر 363 روز تک ہر دن ٹی بیگ پر ایک نئی پینٹنگ بنائی۔ اس پینٹنگ کو انہوں نے اپنی روزمرہ ڈائری کے طور پر مرتب کیا جس میں انہوں نے اپنے روزمرہ احساسات اور واقعات کو نمایاں کیا۔ یہ چھوٹی پینٹنگز ایک جانب تو ان کی زندگی کو ظاہر کرتی ہیں اور دوسری جانب یہی پینٹگز فالتو اشیا کے استعمال کی اہمیت بھی ظاہر کرتی ہیں۔اس دوران ان کے دوست ہر طرح اور سائز کے استعمال شدہ ٹی بیگز انہیں بھیجنے لگے اور وہ ان پر فن پارے بنانے لگیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ ٹی بیگ پر چائے کے دھبوں کو بھی تخلیقی انداز میں پیش کیا گیا اور انہیں مصوری کا ایک نمونہ بنادیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ انہوں نے لینڈ اسکیپ کے قدرتی مناظرسمیت روزمرہ اشیا مثلاً چھتری وغیرہ کی تصاویر بھی بنائی ہیں۔روبی کے اس اہم کام کو دنیا بھر میں سراہا گیا ہے۔ اس کے بعد انہوں نے 2016ء میں دو پروجیکٹ اور شروع کیے جن کا نام چائے کے 52 ہفتے اور جاپان میں چائے کے 26 دن رکھے ہیں۔ اس دوران وہ جاپان اور فرانس میں سفر کرتی رہیں اور چائے پینے کے ساتھ ساتھ پینٹنگ کرتی رہیں۔

About Admin

Check Also

اہم دھات خارج کرنے والا نایاب درخت

کیلیڈونیا(مانیٹرنگ ڈیسک) کرہٴ ارض کے بارانی جنگلات میں ایک انوکھا درخت ایسا بھی پایا جاتا …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: