Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / دلچسپ و عجیب / اسپین میں ایک دوسرے پر انڈے اور آٹا پھینکنے کا انوکھا تہوار

اسپین میں ایک دوسرے پر انڈے اور آٹا پھینکنے کا انوکھا تہوار

میڈرڈ: اسپین میں گزشتہ 200 برس سے ایک ایسا تہوار منایا جارہا ہے جس میں لوگ فوجی لباس پہن کر ایک دوسرے پر انڈے اور آٹے سے حملہ کرتے ہیں۔
دنیا میں لوگ اپنے مذہب، ذات اور زبان کی وجہ سے مختلف طرح کے تہوار مناتے ہیں اور تہوار میں کسی طرح کی کوئی حد مقرر نہیں ہوتی یہی وجہ ہے کہ دنیا میں مختلف انداز سے تہوار منانے کی روایات دیکھنے میں آتی ہیں۔
اسپین وہ واحد ملک ہے جہاں اپنے پیچھے جنگلی بھینسے کو بھگانے کی روایت تو قائم ہے لیکن ایک تہوار ایسا بھی ہے جس میں لوگ ایک دوسرے پر انڈا اور آٹا پھینک کر خوش ہوتے ہیں۔دوسو سال پُرانے اس تاریخی تہوار کو ہسپانوی ’ایلس اینفری نیٹس‘ کہتے ہیں، اس تہوار کو ایک ٹاؤن میں ہرسال مناتے ہیں۔اس تہوار کو منانے والے تمام شرکا فوجی وردی پہن کر جمع ہوتے ہیں انڈا اور آٹا برسا کر ایک دوسرے کو اس میں لت پت کردیتے ہیں۔روایتی طور پر اس تہوار کو منانے والے شرکاء فوجی لباس پہن کر ہتھیاروں کی جگہ انڈے اور آٹے سے ایک دوسرے پر حملہ کرکے ٹاؤن پر جھوٹ موٹ کا قبضہ کرتے ہیں۔مقامی افراد کا کہنا ہے کہ یہ تہوار سب کو ایک دوسرے سے ملاتا ہے۔فیسٹیول کے آخر میں شاندار آتش بازی کا بھی مظاہرہ کیا جاتا ہے اور فرضی انتخابات بھی ہوتے ہیں۔مقامی افراد کے مطابق ہر برس 28 دسمبر کو منائے جانے والے اس فیسیٹول کا مقصد شہنشاہ ہیرو ڈوٹس کی جانب سے صدیوں قبل کیے گئے قتل عام کو اجاگر کرنا ہے۔

About Admin

Check Also

اپنے مالک کی زبان سمجھنے والے بطخ کے بچے

سیئول(مانیٹرنگ ڈیسک) جنوبی کوریا میں ایک شخص نے بطخ کے 21 بچوں کو اس وقت …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: