Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / بین الاقوامی / لاس ویگس حملہ آور نے ہوٹل میں کیمرے لگا رکھے تھے، امر یکی حکام

لاس ویگس حملہ آور نے ہوٹل میں کیمرے لگا رکھے تھے، امر یکی حکام

لاس ویگس (فارن ڈیسک) امریکی شہر لاس ویگس میں گولیاں مار کر 59 افراد کو ہلاک اور 500 سے زیادہ کو زخمی کرنے والے حملہ آور سٹیون پیڈک نے اپنے ہوٹل اور کمرے میں کئی کیمرے لگا رکھے تھے۔پولیس حکام نے کہا ہے کہ راہداری کے دو کیمروں اور دروازے کے ‘پیپ ہول’ میں نصب کیمرے سے وہ دیکھ سکتے تھے کہ آیا پولیس والے ان کی طرف تو نہیں آ رہے۔اب تک اس بات کا تعین نہیں ہو سکا کہ 64 سالہ پیڈک نے یہ حملہ کیوں کیا۔ تاہم یہ ظاہر ہے کہ انھوں نے اس کے لیے بڑے پیمانے پر منصوبہ بندی کر رکھی تھی۔شیرف جوزف لومبارڈو نے نامہ نگاروں کو بتایا: ‘اس شخص نے پہلے سے منصوبہ بندی کی تھی۔ اس نے کمرے میں جس قسم اور جس مقدار میں اسلحہ جمع کر رکھا تھا، (اس سے لگتا ہے کہ) اس بہت وسیع منصوبہ بندی کی تھی اور مجھے یقین ہے کہ اس نے ہر چیز کا بغور جائزہ لیا تھا۔’انڈرشیرف کیون میک ماہل نے کہا ہے کہ بظاہر پیڈک نے حملہ اس وقت روکا جب ایک سکیورٹی گارڈ ان کے کمرے کی طرف آیا۔امریکی تاریخ کے اس بدترین حملے نے امریکہ میں اسلحے کے کنٹرول کی بحث ایک بار پھر چھیڑ دی ہے تاہم امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ اس بارے میں ابھی بات کرنے کا وقت نہیں ہے۔تاہم امریکی ہوم لینڈ سکیورٹی کے ایک عہدے دار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر خبررساں ادارے کو بتایا کہ پیڈک کی ذہنی بیماری کا کوئی سراغ نہیں ملا۔ نہ ہی پولیس کو پیڈک کے کسی مقامی یا بین الاقوامی دہشت گرد گروہ سے روابط کا پتہ چل سکا ہے۔پیڈک نے پولیس کی طرف کمرے میں دھاوا بولنے کے بعد خود کو ہلاک کر دیا۔ پولیس کے پاس اس کا کوئی مجرمانہ ریکارڈ نہیں تھا۔تاہم پولیس کو پیڈک کے کمرے میں 23 بندوقیں ملیں، جب کہ اس کے گھر پر بھی آتشیں اسلحہ اور دھماکہ خیز مواد موجود تھا۔ حکام کا کہنا ہے کہ کل ملا کر اس کے پاس 47 ہتھیار تھے۔پولیس اب بھی پیڈک کی گرل فرینڈ میریلو ڈینلی میں دلچسپی رکھتی ہے جو اس وقت فلپائن میں ہیں۔ شیرف لومبارڈو نے کہا کہ ‘ہم رابطے میں ہیں۔’اس حملے کے بعد امریکہ میں اسلحے پر کنٹرول کے بارے میں ایک بار پھر سے بحث چھڑ گئی ہے۔تاہم صدر ٹرمپ نے اپنی انتخابی مہم کے دوران بار بار اسلحہ رکھنے کے حق کا دفاع کرنے کا عزم ظاہر کیا تھا۔ انھوں نے منگل کے روز کہا کہ شاید اس پر بحث کا وقت آئے گا۔اس سے قبل انھوں نے کہا تھا کہ ‘ہم وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ اسلحے کے قانون پر بات کریں گے۔اس کے علاوہ صدر ٹرمپ نے اس واقعے کو مقامی دہشت گردی کہنے سے بھی گریز کیا ہے۔

About Admin

Check Also

leopard

بھارت میں تیندوے نے کھیتوں میں گھس کر بچے کو مارڈالا

اتر پردیش(مانیٹرنگ ڈیسک)ریاست اتر پردیش کے گاؤں میں تیندوے نے 10 سالہ بچے پر حملہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: