Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / صعنت و تجارت / 700 ارب کی پولٹری صنعت پر اضافی ٹیکس نہ لگایاجائے ،مرتضیٰ مغل

700 ارب کی پولٹری صنعت پر اضافی ٹیکس نہ لگایاجائے ،مرتضیٰ مغل

کراچی(بمانیٹرنگ ڈیسکر)پاکستان اکانومی واچ کے صدر ڈاکٹر مرتضیٰ مغل نے کہا کہ اگرتیزی سے ترقی کرتی ہوئی700ارب روپے کی پولٹری انڈسٹری پر اضافی ٹیکس نہ لگائے جائیں ، مداخل کی درآمدات پر ٹیکس کم کیے جائیں اور برآمدات کی صورت میں ریفنڈ ادا کیا جائے تو اسکا حجم بڑھ سکتا ہے جس سے روزگار، حکومت کی آمدنی اور زرمبادلہ ذخائر میں اضافہ ہو گا، ان اقدامات سے پولٹری مصنوعات سستی ہو جائیں گی جس سے عوام کو ضروری پروٹین کے حصول میں آسانی ہو گی جس سے صحت عامہ اور فوڈ سیکیورٹی کے مسائل کم ہو جائینگے ، ڈاکٹر مرتضیٰ مغل نے ایک بیان میں کہا کہ بلا روک ٹوک ا سمگلنگ کی وجہ سے بڑاگوشت مہنگا اور چھوٹا گوشت عوام کی قوت خرید کے باہر ہو گیا ہے۔ اسلئے پولٹری عوام کیلئے حیوانی لمحیات کے حصول کا واحد ذریعہ ہے جسے کسی بھی صورت میں مہنگا نہیں ہونا چاہیے ، پولٹری انڈسٹری پر مزید ٹیکس عائد کرنے سے ملکی آبادی کی اکثریت صحت کے بحران میں مبتلا ہو جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ اوسطاً ہر پاکستانی میں پروٹین معمول کی مقدار سے 10 فیصد کم ہے ،ترقی یافتہ ممالک میں انڈے کی سالانہ فی کس کھپت 3سے 400ہے جو پاکستان میں صرف 60 ہے ،امریکا اپنی عوام کی غذا متوازن رکھنے کیلئے ساڑھے 300ارب ڈالر سبسڈی دیتا ہے ، سعودی عرب جیسا ملک بھی پولٹری پر 50فیصد سبسڈی دیتا ہے جبکہ کئی ترقی پذیرممالک بھی ایسا کرتے ہیں مگرپاکستان میں ایسا کچھ نہیں ہے جس نے متوازن اور صحت بخش غذا تک رسائی کواکثریت کی پہنچ سے باہر پہنچا دیا ہے۔

About Admin

Check Also

حکومت پنجاب کی جانب سے کھاد پر زرتلافی سے لاکھوںکسانوں کو فائدہ پہنچے گا

اسلام آباد(نیوز رپورٹر ) حکومت پنجاب کی جانب سے ڈی اے پی کھادوں پر زرتلافی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: