Download http://bigtheme.net/joomla Free Templates Joomla! 3
Home / صعنت و تجارت / ایڈوانس ٹیکس وصولیاں، ایف بی آر کو ریونیو شارٹ فال کا سامنا

ایڈوانس ٹیکس وصولیاں، ایف بی آر کو ریونیو شارٹ فال کا سامنا

سلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کی جانب سے گزشتہ مالی سال 2016-17 کا ٹیکس ہدف حاصل کرنے کے لیے زرعی ترقیاتی بینک لمیٹڈ سے رواں مالی سال 2017-18 کے پہلے 2 ماہ کا 80 ارب روپے کا ایڈوانس ٹیکس بھی جون 2017 میں ہی لیے جانے کا انکشاف ہوا ہے.
مگر اس کے باوجود گزشتہ مالی سال کے لیے مقرر کردہ ٹیکس وصولیوں کا نظر ثانی شُدہ ہدف بھی حاصل نہیں ہوسکا اور ایف بی آرکو ڈیڑھ سو ارب روپے کے لگ بھگ ریونیو شارٹ فال کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ایف بی آرکی سابق انتظامیہ کی جانب سے رواں مالی سال کا ٹیکس بھی گزشتہ سال میں ہی ایڈوانس لینے کے باعث ایف بی آر کی نئی انتظامیہ کو رواں مالی سال کے پہلے ماہ ریونیو شارٹ فال کا سامنا کرنا پڑا جس کا نوٹس لیتے ہوئے نئے چیئرمین ایف بی آر طارق پاشانے فوری اقدامات کرتے ہوئے چیف کمشنرز کانفرنس طلب کی اور ریونیو شارٹ فال کو پورا کرنے کی ہدایات جاری کیں ۔
جن کے نتیجے میں گزشتہ ماہ(اگست)کے دوران ٹیکس وصولیوں میں خاطر خواہ بہتری واقع ہوئی ہے جبکہ ایف بی آر کی جانب سے رواں مالی سال کے پہلے دو ماہ کا ٹیکس گزشتہ مالی سال کے آخری ماہ (جون)ایڈوانس لینے کا انکشاف زرعی ترقیاتی بینک لمیٹڈ سے ایڈوانس ٹیکس کے واجبات کے بارے میں مرتب کردہ رپورٹ میں کیا گیا ہے کہ چیئرمین ایف بی آر کو زیڈ ٹی بی ایل کے ذمے واجب الادا ایڈوانس ٹیکس بارے بھجوائی جانے والی رپورٹ کی ایکسپریس کو دستیاب کاپی میں بتایا گیا ہے کہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے گزشتہ مالی سال کے سال کے آخری ماہ (جون) کی زیڈ ٹی بی ایل کے ذمے بننے والے ایڈوانس ٹیکس کی قسط سمیت مجموعی طور پرایک ارب چھ کروڑ لاکھ ہزار روپے ایڈوانس ٹیکس لیا گیا ہے جس میں جولائی اور اگست 2017 کے لیے بننے والے اسی کروڑ روپے بھی شامل ہیں۔

About Admin

Check Also

PakCurrency

3سال میں 17 ارب 74 کروڑ روپے سے زائد زکوٰۃ جمع

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وزارت مذہبی امور کی جانب سے گزشتہ 3 سال کے دوران ملک بھر …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: